متحدہ عرب امارات کی خصوصی اولمپکس کی عالمی کھیلوں کی میزبانی

ابوظہبی، متحدہ عرب امارات میں 14 تا 21 مارچ تک ہونے والی 2019 کی خصوصی اولمپکس کی عالمی کھیلوں میں 190 ممالک سے تعلق رکھنے والے ایتھلیٹوں، کوچوں، رضاکاروں اور تماشائیوں کو خوش آمدید کہا گیا۔ اس طرح یہ اس  سال کی کھیلوں کی سب سے بڑی تقریب بن گئی۔

صدر جان ایف کینیڈی کی ہمشیرہ، یونِس کینیڈی شرِیور نے 1968ء میں خصوصی اولمپکس تحریک کی بنیاد رکھی۔ یہ کھیل ذہنی معذوری کے حامل بچوں اور بڑوں کو اولمپک کی طرز پر سال بھر مختلف قسم کی کھیلوں کی تربیت اور ایتھلیٹک مقابلوں کا موقع فراہم کرتے ہیں۔  پہلی مرتبہ یہ کھیلیں 1968ء میں شکاگو میں منعقد کی گئیں۔

نائب صدر پینس کی اہلیہ کیرن پینس نے 2019 کی کھیلوں میں امریکی وفد کی قیادت کی اور افتتاحی تقریب میں شرکت کی۔ آٹھ دنوں پر مشتمل خصوصی اولمپکس کی بین الاقوامی کھیلیں پہلی مرتبہ مشرق وسطٰی/شمالی افریقہ کے خطے میں منتعاد کی گئی ہیں۔

جمناسٹک، تیراکی، باسکٹ بال، ویٹ لفٹنگ، والی بال، فٹ بال اور کئی ایک دوسری کھیلوں سمیت 7,500 کھلاڑیوں نے  گرمیوں کی 24 کھیلوں کے مقابلوں میں حصہ لیا۔ ذیل میں ایتھلیٹوں اور کھیلوں کی چند ایک تصویری جھلکیاں پیش کی جا رہی ہیں جو اِن کھیلوں کی کامیابی میں معاون ثابت ہوئیں:

Athlete lifting barbell with weights (© Dominika Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)
(© Dominika Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)

خصوصی اولمپکس کی کھیلوں میں متحدہ عرب امارات کے ابوظہبی کے نمائشوں کے قومی مرکزمیں منعقد ہونے والے ویٹ لفٹنگ کے مقابلوں میں ایک خاتون کھلاڑی ویٹ اٹھا  رہی پے۔


 

Two athletes swimming in lanes (© Karim Sahib/AFP/Getty Images)
(© Karim Sahib/AFP/Getty Images)

ابوظہبی کے زید سپورٹس سٹی سٹیڈیم میں یوگنڈا کا ایک تیراک تیراکی کے 25 میٹر ‘بریسٹ سٹروک’ مقابلے میں حصہ لے رہا ہے۔


 

Gymnast above balance beam (© Dominika Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)
(© Dominika Zarzycka/NurPhoto via Getty Images)

ازبکستان سے تعلق رکھنے والی جمناسٹک کی ایک کھلاڑی ‘بیلنس بیم’ پر جمناسٹک کھیل کے فن کارانہ شعبے میں حصہ لے رہی ہے۔


 

Woman playing basketball (© Dominicka Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)
(© Dominika Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)

متحدہ عرب امارات کی خواتین کی باسکٹ بال ٹیم کی کھلاڑی قازقستان کی ٹیم کے کھلاڑیوں سے مقابلہ کر رہی ہیں۔


 

Man and boy hugging (© Dominika Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)
(© Dominika Zarzycka/NurPhoto/Getty Images)

ابوظہبی میں ہونے والی خصوصی اولمپکس کی عالمی کھیلوں میں جوڈو کا ایک کھلاڑی مقابلے کے بعد اپنے کوچ سے گلے مل رہا ہے۔

خصوصی اولمپکس کے عالمی کھیل دو دو سال کے وقفے سے گرمیوں اور سردیوں کے موسموں میں باری باری ہوتے ہیں۔ اِن کھیلوں میں شرکت کے لیے زیادہ سے زیادہ عمر کی کوئی قید نہیں۔ تاہم کم از کم عمر کی حد 18 سال ہے۔